اشاعت کے باوقار 30 سال

معین اختر کی کمی کا احساس ہوتا ہے

معین اختر کی کمی کا احساس ہوتا ہے

لاہور: سینئر اداکارہ بشری انصاری نے کہا ہے کہ مجھے ظاہری خوبصورتی سے زیادہ باطنی خوبصورتی اچھی لگتی ہے، جو انسان اندر سے خوبصورت ہو گا قدرتی طور پر بیرونی طور پر بھی اس کے اوصاف نظر آئیں گے۔ انہوں نے ایک انٹرویو کے دوران کہا کہ میں نے کبھی خوبصورتی کو ترجیح نہیں دی بلکہ ہمیشہ اپنے اندر کو خوبصورت بنانے کی کوشش کی ہے اور میرا دوسروں کو بھی مشورہ ہے کہ خود کو اندر سے خوبصورت بنائیں۔ انہوں نے کہا کہ میرا شمار ان لوگوں میں ہوتا ہے جو اپنے جونیئر کی کامیابیوں پر خوش ہوتے ہیں، خدا نے مجھے جو عزت اور مرتبہ عطا کیا ہے اس پر مرتے دم تک اپنے رب کا شکر ادا کرتی رہوں گی۔ انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ میں نے کبھی کسی سے حسرت نہیں کی اور یہی میری خوبصورتی کا راز ہے۔ بشری انصاری نے کہا کہ مجھے کبھی کبھار اپنے سینئر اداکار معین اختر کی کمی کا احساس ہوتا ہے، ان کے دنیا سے جانے کے بعد نہ صرف شوبز بلکہ میری اپنی ذات کو بھی گہرہ دکھ ملا کیونکہ معین اختر کے ساتھ جس طرح کی کیمسٹری تھی وہ کسی اور کے ساتھ نہیں بن سکی۔

loading...