اشاعت کے باوقار 30 سال

جاپانی وزیر اعظم بنکر میں بری طرح گر گئے

جاپانی وزیر اعظم بنکر میں بری طرح گر گئے

ٹوکیو: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ رواں ہفتے اپنے طویل دورہ ایشیا کے دوران جاپان بھی گئے، جہاں انہوں نے جاپانی وزیراعظم شینزو ایبے سے ملاقات کی اور مختلف امور پر بات چیت کے ساتھ ساتھ وہاں گولف بھی کھیلی۔ لیکن اب اس حوالے سے خبریں گردش کر رہی ہیں کہ اتوار کو امریکی صدر کے ساتھ کاسومیگاسکی کنٹری کلب میں گولف کھیلنے کے دوران جاپانی وزیر اعظم بنکر میں بری طرح گر گئے تھے اور ٹرمپ کو اس کا پتہ بھی نہ چلا۔ حال ہی میں سوشل میڈیا پر شیئر ہونے والی ایک ویڈیو کے حوالے سے دعویٰ کیا جا رہا ہے کہ یہ ٹرمپ اور شینزو ایبے کی گولف کھیلنے کی ویڈیو ہے۔ ہیلی کاپٹر سے لی گئی اس فوٹیج میں دیکھا جا سکتا ہے کہ جاپانی وزیر اعظم مبینہ طور گولف بنکر سے واپس آتے ہوئے پشت کی بل واپس بنکر میں گر گئے، انہیں اٹھانے کے لیے اسٹاف کے لوگ آگے بڑھے تاہم تب تک وہ خود ہی اپنے پیروں پر کھڑے ہو گئے۔ دلچسپ بات یہ کہ ٹرمپ اس ساری صورتحال سے بے خبر کچھ فاصلے پر آگے کی جانب چلتے نظر آئے۔شینزو ابے کے گرنے اور ٹرمپ کی 'بے خبری' پر سوشل میڈیا پر لوگ مختلف تبصرے کرتے نظر آئے۔ کسی نے کہا، 'پشت کے بل گرنے پر شینزو ایبے کو نظر انداز کر دیا گیا، جنہوں نے دورہ جاپان کے دوران ٹرمپ کو بہت سارے مزیدار کھانے کھلائے، لیکن انہیں صلے کے طور پر مزید ہتھیار خریدے کے وعدے پر مجبور کیا گیا'۔ دوسری جانب یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ ٹرمپ، جاپانی وزیر اعظم کی ٹوئیٹس کو بھی نظر انداز کرتے ہیں کیونکہ انہوں نے شینزو ایبے کو فالو ہی نہیں کیا ہوا۔ دورہ جاپان کے دوران ٹرمپ اور شینزو ایبے کی ملاقات میں شمالی کوریا سمیت اہم امور پر بات چیت کی گئی تھی۔

loading...