اشاعت کے باوقار 30 سال

شمسہ ہاشمی کی ثنا میر پر شدید تنقید

شمسہ ہاشمی کی ثنا میر پر شدید تنقید

لاہور: پاکستان کرکٹ بورڈ ویمن ونگ کی سابق جی ایم شمسہ ہاشمی نے ورلڈ کپ اور ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں ثنا میر کی قیادت اور ان کے فیصلوں پر کڑی تنقید کرتے ہوئے اہم وقت پر نامناسب فیصلوں پر سوالات اٹھا دئے۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ 2016 اور ورلڈ کپ 2017 میں کچھ میچز میں ان کے فیصلے پاکستان ٹیم کے لیے نقصان دہ ثابت ہوئے، میگا ایونٹ میں پاکستان ٹیم کے اہم میچز میں ان کی کارکردگی کے حوالے سے تحقیقات کی ضرورت ہے۔ ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ میں چنائی میں کھیلا گیا 16واں میچ جس میں پاکستان کو ویسٹ انڈیز نے 104 رنز کا ہدف دیا اور پھر بھی گرین شرٹس کو 4 وکٹ سے شکست کا سامنا کرنا پڑا، اس میچ میں 10.5 اوورز میں 44 پر 3 وکٹیں گری تھیں جب ثنا میر بیٹنگ کے لئے آئیں اور انہوں نے 26 گیندوں پر 6 ڈاٹ بالز کھیل کر بغیر کوئی باؤنڈری لگائے 18 رنز سکور کیے۔ انہوں نے کہا کہ ویمنز ورلڈ کپ 2017 میں انگلینڈ نے پاکستان کے خلاف پہلے کھیلتے ہوئے 7 وکٹ پر 377 رنز بنائے، پاکستان کو میچ میں ڈک ورتھ لوئس میتھڈ کے تحت 103 رنز سے شکست ہوئی، انگلش اوپنرز نے سنچریز سکور کیں۔ انگلش اوپنرز کے خلاف ثنا میر کے فیلڈنگ پلان پر سوالیہ نشان اٹھتے ہیں، انہوں نے لیگ سائیڈ پر 100 سے زیادہ رنز سکور کیے مگر انہوں نے اس پر توجہ نہ دی۔ پاکستان نے جنوبی افریقہ کو 50 اوورز میں 207 رنز کا ہدف دیا، قومی ٹیم میچ جیتنے کی پوزیشن میں تھی تاہم ثنا میر کی جانب سے بولرز کے درست استعمال نہ کرنے کے باعث 49ویں اوور میں ٹیم شکست کھا گئی۔ ثنا میر کی جانب سے ایسا دانستہ کیے جانے کے سوال پر انہوں نے کہا کہ یہ میرا مؤقف نہیں ہے تاہم اس حوالے سے پی سی بی کو تحقیقات کرنی چاہئیں۔