اشاعت کے باوقار 30 سال

سٹاک مارکیٹ میں 62 ارب سے زائد سرمایہ ڈوب گیا

سٹاک مارکیٹ میں 62 ارب سے زائد سرمایہ ڈوب گیا

کراچی: بلوچستان بحران اور ملکی سیاسی حالات کی وجہ سے سرمایہ کاروں نے نئی سرمایہ کاری سے ہاتھ کھینچ لیا جس کے سبب تیزی سے بلندیوں کی جانب گامزن پاکستان سٹاک مارکیٹ ایک بار پھر مندی کا شکار ہو گئی سرمایہ کاروں کے 62 ارب روپے سے زائد ڈوب گئے۔ کاروبار کا آغاز مثبت ہوا۔ ٹیلی کام ،گیس ، سٹیل اور توانائی کے شعبوں میں سرمایہ کاری کی بدولت ٹریڈنگ کے دوران کے ایس ای 100 انڈیکس 43252.50 پوائنٹس کی سطح پر جا
پہنچا، بعد ازاں مقامی انسٹی ٹیوشنز اور بروکریج ہاؤسز کی جانب سے بعض سٹاکٹس میں فروخت کا دباؤ دیکھا گیا جس کے سبب مارکیٹ کی اْلٹی گنتی شروع ہو گئی اور انڈیکس 43100 ،43000 اور 42900 پوائنٹس کی 3 بالائی حد سے گر گیا۔ کے ایس ای 100 انڈیکس میں 297.78 پوائنٹس کی کمی ریکارڈ کی گئی جس سے انڈیکس 43112.12 پوائنٹس سے گھٹ کر 42814.34 پوائنٹس پر آ گیا۔ مجموعی طور پر 370 کمپنیو ں کا کاروبار ہوا جس میں سے 132 کمپنیوں کے حصص کی قیمتو ں میں اضافہ ،217 میں کمی اور 21 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔

loading...