اشاعت کے باوقار 30 سال

پرامن اور خوشحال بلوچستان میں منشیات کی کوئی گنجائش نہیں

پرامن اور خوشحال بلوچستان میں منشیات کی کوئی گنجائش نہیں

کوئٹہ: کمانڈر سدرن کمانڈ لیفٹیننٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ نے کہا ہے کہ پرامن اور خوشحال بلوچستان میں منشیات کی کوئی گنجائش نہیں ہے صوبے میں منشیات کے خاتمے کے لئے ہر ممکن اقدامات کئے جا رہے ہیں یہ بات انہوں نے منگل کو ریجنل ڈائریکٹوریٹ اینٹی نارکوٹکس فورس بلوچستان، فرنٹیئر کور بلوچستان، ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن کوئٹہ اور پاکستان ریلوے پولیس کی جانب سے کچھ موڑ میں منشیات کو نذر آتش کرنے کی مشترکہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہی کمانڈر سدرن کمانڈ لیفٹیننٹ جنرل عاصم سلیم باجوہ نے کہا کہ منشیات نوجوان نسل کو تباہ کرتی ہیں نوجوان ملک کا مستقبل ہیں اور ہم کسی کو اجازت نہیں دیں گے کہ وہ ہمارے مستقبل سے کھیلے انہوں نے کہا کہ قانون نافذ کرنے والے ادارے منشیات کے خاتمے کے خلاف زیرو ٹالرینس کی پالیسی پر عمل پیرا ہیں صوبے میں منشیات کے ناسور کو کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا انہوں نے کہا کہ منشیات کی خرید و فروخت سے حاصل ہونے والا سرمایہ دہشتگرد دہشتگردی کے فروغ کے لئے استعمال کرتے ہیں ساڑھے چار ارب ڈالر کی منشیات کا پکڑا جانا سیکورٹی فورسز کی بڑی کامیابی ہے یہ سیکورٹی فورسز کا قوم پر احسان ہے جنہوں نے کئی گھر تباہ ہونے سے بچائے ہیں تقریب میں منشیات کی ایک بڑی مقدار کو جلا کر تلف کیا گیا جس میں 110 ٹن چرس، 55 ٹن افیون 23 ٹن ہیروئن 9 ٹن مارفین 3 ٹن ایمفٹامائن 379 کلو گرام کوکین 4.5 ٹن امونیم کلورائیڈ 522 لیٹر ایسٹون 4205 لیٹر ایسٹک این ہائیڈرائڈ 593 لیٹر اسپرٹ امونیا 1404 لیٹر دیگر ممنوعہ کیمیکل 380.5 لیٹر، بوتل شراب شامل تھیں۔ اس منشیات کی قیمت بین الاقوامی مارکیٹ میں کھربوں روپے ہے یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ اس سال اے این ایف اور ایف سی بلوچستان کی مشترکہ کارروائی کے ذریعے ضلع لورالائی اور قلعہ عبداللہ کے مختلف علاقوں میں 128ایکڑ پر موجود پوست کی فصل کو بھی تلف کیا گیا جبکہ اینٹی نارکوٹکس فورس بلوچستان کی جانب سے فرنٹیئر کور بلوچستان اور ضلعی انتظامیہ کے تعاون سے ضلع قلات کی تحصیل خالق آباد(منگچر) میں 279 ایکڑ رقبے پر پھیلی بھنگ کی فصل کو تلف کر کے ذمہ داران کی خلاف قانونی کارروائی کا آغاز کیا گیا جس کے نتیجے میں منشیات کی ایک بڑی مقدار کو بننے اور ملک میں پھیلنے سے روک دیا گیا علاوہ ازیں موجودہ سال کے دوران اینٹی نارکوٹکس فورس بلوچستان کے 118 کامیاب چھاپوں کے نتیجے میں تقریبا 212 ٹن منشیات پکڑی گئی اور 57 ملزمان کو گرفتار کر کے ان کے خلاف مقدمات درج کئے گئے۔ تقریب میں قانون نافذ کرنے والے اداروں اور سول انتظامیہ کے نمائندوں نے بھی شرکت کی اور منشیات کی روک تھام کے سلسلے میں اینٹی نارکوٹکس فورس کی کارکردگی کو سراہا۔

loading...