اشاعت کے باوقار 30 سال

ڈالر پھر بے لگام

ڈالر پھر بے لگام

کراچی: کاروباری ہفتے کے پہلے روز ہی انٹر بینک مارکیٹ میں ڈالر ایک بار پھر بے قابو ہو گیا۔ دوران ٹریڈنگ ڈالر ڈھائی روپے اضافے سے 110 روپے پر بھی ٹریڈ کرتا ہوا نظر آیا مگر زیادہ تر ڈالر کی قدر 108 روپے 50 پیسے سے ساڑے 9 روپے کے درمیان ہی رہی۔ فوریکس ڈیلرز نے سٹیٹ بینک کے اعلانیہ کی ایک نہ سنی اور بینکوں میں ڈالر کی اڑان جاری ہے۔ ڈالر کی قدر میں اضافے سے دو روز میں پاکستان پر قرضوں کا بوجھ 320 ارب روپے بڑھ گیا۔ ڈالر کی قیمت میں اضافے نے مہنگائی کے دروازے پر دستک دی ہے جس سے پیٹرول، ڈیزل، بجلی، کھانے کا تیل، دالیں سب مہنگی ہو جانے کا خدشہ ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ بیرون ملک پڑھنے والے طلبہ اور علاج و معالجہ کی ادائیگیاں بھی مہنگی ہو جائیں گئیں۔ معاشی ماہرین کے مطابق ڈالر کی قدر میں اضافے سے درآمدات میں کمی جبکہ برآمدات میں اضافے کا امکان ہے۔

loading...