اشاعت کے باوقار 30 سال

میاں صاحب کہتے کچھ اور کرتے کچھ ہیں

میاں صاحب کہتے کچھ اور کرتے کچھ ہیں

لاہور: پاکستان پیپلز پارٹی کے چئیرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ میاں صاحب کہتے کچھ ہیں اور کرتے کچھ ہیں انہیں مشورہ ہے کہ تصادم کی سیاست چھوڑ دیں نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے بلاول بھٹو نے کہا کہ ہمیں نواز شریف کے اقدامات اور طریقہ کار سے مسئلہ ہے، نواز شریف اپنے طور طریقے بدلیں تاکہ بات چیت کا ماحول پیدا ہو سکے، ان کا یہ رویہ ملک میں پنپتی جمہوریت کو خطرے میں ڈال رہا ہے، میاں صاحب کہتے کچھ ہیں اور کرتے کچھ ہیں نواز شریف کے ساتھ ہاتھ نہ ملانے کو مسترد کرنے سے جوڑنا مناسب نہیں، انہوں نے کہا کہ نواز شریف صاحب کے ساتھ ہمارے تجربے خوشگوار نہیں رہے میاں نواز شریف اور جمہوریت کا کوئی تعلق نہیں بنتا میرا میاں صاحب کو مشورہ ہو گا کہ تصادم کی سیاست چھوڑ دیں، بلاول بھٹو نے کہا کہ پیپلز پارٹی آج بھی جمہوریت کے ساتھ ہے پیپلز پارٹی کی تاریخ جدوجہد کی تاریخ ہے، ہمارا بنیادی منشور روٹی، کپڑا اور مکان ہی رہے گا، یہ ایک نعرہ نہیں تھا، بلکہ ایک سوچ اور امید کا نعرہ تھا۔

loading...