اشاعت کے باوقار 30 سال

آج کا دن تاریخ میں

صدام حسین کو گرفتار کر لیا گیا

اتر پردیش کی خاتون پہلی نیوی پائلٹ بننے میں کامیاب

اتر پردیش کی خاتون پہلی نیوی پائلٹ بننے میں کامیاب

نئی دہلی: آبادی کے لحاظ سے دنیا کے سب سے بڑے ملک اور اپنی فوج کے حوالے سے دنیا کی بڑی فوج کا دعویٰ کرنے والے بھارت میں پہلی بار ایک خاتون نیوی پائلٹ بننے میں کامیاب ہو گئیں۔ ریاست اتر پردیش میں پیدا ہونے والی شبھانگی سواروپ 22 نومبر 2017 کو ہندوستان کی تاریخ میں پہلی خاتون نیوی پائلٹ بنیں۔ شبھانگی سواروپ ان 328 کیڈٹ میں سے ایک ہیں، جنہوں نے 22 نومبر کو ریاست کیرلا کی ایڑی ملا نیول اکیڈمی سے تربیت مکمل کی۔ پاسنگ آؤٹ تقریب کے بعد نہ صرف شبھانگی سواروپ بھارت کی پہلی نیوی پائلٹ بنیں، بلکہ مزید تین خواتین بھی ’نیول ارمامنٹ انسپکٹر‘ (این اے آئی) بننے میں کامیاب ہو گئیں۔ پہلی نیوی پائلٹ کا اعزاز حاصل کرنے کے بعد شبھانگی سواروپ جلد ہی بھارتی نیوی ایوی ایشن برانچ میں طیارے اڑانے کی ذمہ داریاں سنبھالیں گی۔ شبھانگی سواروپ بھارتی نیوی کی اس آپریشن ٹیم کا حصہ ہوں گی، جو ایئرکرافٹ کے ذریعے کمیونی کیشن اور ہتھیاروں سے متعلق کام کرتی ہے۔ پہلی تین خواتین این اے آئی انسپکٹر کا اعزاز حاصل کرنے والی خواتین میں نئی دہلی کی استھا سیگل، پونڈیچری کی روپا اے جب کہ کیرلا کی سکتی مایا ایس شامل ہیں۔ خیال رہے کہ شبھانگی سواروپ کے والد گیان سواروپ بھی نیوی میں کمانڈر ہیں۔ شبھانگی سواروپ نے طیارے اڑانے کی تربیت ریاست تلنگانہ کے شہر حیدر آباد دکن کے ایئر فورس سینٹر میں حاصل کی۔ شبھانگی سواروپ نے مرد پائلٹ کے ساتھ تربیت حاصل کی، جب کہ انہیں طیارہ اڑانے کی تربیت فراہم کرنے والے پائلٹ بھی مرد تھے۔

loading...