اشاعت کے باوقار 30 سال

آج کا دن تاریخ میں

صدام حسین کو گرفتار کر لیا گیا

ہمیں خیرات نہیں اپنا حق چاہئے

ہمیں خیرات نہیں اپنا حق چاہئے

کراچی: سربراہ ایم کیو ایم (پاکستان) ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا کہ ہمیں خیرات نہیں اپنا حق چاہئے، ہم کچرا اٹھانے کی مشینیں لگا رہے ہیں سندھ حکومت پیسہ بٹورنے کی مشینیں لگا رہی ہے، کراچی کی عوام کی خون پسینے کی کمائی سے لوگ ٹھاٹ کر رہے ہیں، کراچی والوں کو سوچنا ہو گا کہ وہ سینکڑوں ارب سرکاری خزانے میں دیتے ہیں اور اس میں کتنا واپس ملتا ہے، انہوں نے کہا کہ چند مہینوں کی بات ہے الیکشن میں برساتی مینڈکوں کے خلاف مقدمے کروائیں گے، ہم نے کم خرچ بالانشیں کے اصول پر عمل کر کے ڈمپر کی منی سروس شروع کی ہے جس کے تحت ہر یو سی چیئرمین کو کچرا اٹھانے کے لئے کسی سہارے کے بغیر کام کرنے کے قابل بنایا جا رہا ہے، ان خیالات کا اظہار انہوں نے بدھ کی شام کورنگی نمبر 5 راشد لطیف اکیڈمی گراؤنڈ میں 13 ٹریکٹرز بلدیہ کورنگی کے سالڈ ویسٹ مینجمنٹ ڈپارٹمنٹ کے حوالے کئے جانے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا، اس موقع پر قومی و صوبائی اسمبلی کے ارکان، بلدیہ کورنگی کے چیئرمین سید نیئر رضا، وائس چیئرمین سید احمر علی اور دیگر منتخب نمائندے اور افسران کے علاوہ علاقہ مکینوں کی ایک بڑی تعداد بھی موجود تھی، ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا کہ ہر وقت بینک اکاؤنٹ نہیں عوام کا مفادبھی پیش نظر ہونا چاہئے، کراچی کو سینکڑوں ارب کے ٹیکس کے عوض صرف تین سڑکیں بنا کر دی گئیں، ساڑھے 7 ارب روپے میں جو سڑکیں بنائی گئی ہیں ہم ایسی نو سڑکیں بنا دیتے، انہوں نے کہا کہ اب ہمیں عزت کے ساتھ جینے اور مرنے کا فیصلہ کرنا ہو گا، پہلے تالیاں بجانے اور تقریر سننے پر مقدمات بنتے تھے، الیکشن کا وقت آنے دیں عوام ان کی ایف آئی آر کاٹیں گے اور عوام ہی ان کا فیصلہ کریں گے، کے ایم سی ورکشاپ میں کئی مشینیں قابل استعمال ہیں، آنے والی کل ہماری ہے جسے کوئی چھین نہیں سکتا، اندرون سندھ میں سیاسی تبدیلی کا وقت آ گیا ہے، مردم شماری شفاف ہوئی تو وزیر اعلیٰ کی کرسی بھی نہیں رہے گی، عام سندھی نے نہیں سندھی وڈیروں نے ہمارا حق مارا، ہم اقتدار میں آئے تو پورے سندھ کو حقوق دلوائیں گے، تقریب سے خطاب کرتے ہوئے میئر کراچی وسیم اختر نے کہا کہ آٹھ سال قبل شہر بنا کر لوگوں کے حوالے کیا، ایڈمنسٹریٹرز نے ان علاقوں کو تباہ کر دیا، ہم ان تباہ حال علاقوں اور اداروں کو صحیح کر رہے ہیں،یہ فرق ہے ہم اصل نمائندے ہیں، ہم سے پہلے والوں کا ویژن صرف لوٹ مار تھا، آہستہ آہستہ شہر کا کھویا ہوا امیج بحال کریں گے، ضلع کورنگی نے محدود وسائل میں بہترین کام کیا، میئر کراچی نے کہا کہ ایم کیو ایم پاکستان کے بلدیاتی نمائندوں کا ویژن سب کے سامنے ہے، جب ہم نے چارج لیا تو کے ایم سی اور ڈی ایم سیز کا حال مرے ہوئے گھوڑوں کی طرح تھا،ہم نے شہر کو بنانے کے لئے مل کر کام کئے تھے مگر بعد میں آنے والے لوگوں کا ایک ہی کام تھا کہ لوٹ مار کیسے کی جائے لہٰذا تباہ حال علاقے ہمارے حوالے کئے گئے اور بدترین حالت میں محکمے ہمیں ملے لیکن اس کے باوجود ہم نے ناکافی اور محدود وسائل کی پروا نہ کرتے ہوئے شہر کے مختلف علاقوں میں اپنے ووٹرز کے لئے کام کئے جو دوسروں کے لئے بھی مثال ہے، انہوں نے کہا کہ تمام تر رکاوٹوں کے باوجود ہم نے کراچی کو اس کے حقوق دلانے کا تہیہ کیا ہوا ہے اور ہم کسی بھی قیمت پر اس سے پیچھے نہیں ہٹیں گے، حالات کتنے ہی ناسازگار کیوں ہوں کراچی میں شروع ہونے والا بہتری کا سفر جاری رہے گا، تقریب سے خطاب کرتے ہوئے، بلدیہ کورنگی کے چیئرمین سید نیئر رضا نے کہا کہ کورنگی زون میں 2300 ٹن کچرا یومیہ جمع ہوتا ہے، 22 لاکھ کی لاگت سے مشینری خریدی گئی تاکہ اس کچرے کو روزانہ کی بنیاد پر مختلف علاقوں سے اٹھا کر ٹھکانے لگایا جا سکے، انہوں نے کہا کہ ناکافی بلدیاتی سہولیات کے باعث کورنگی اور لانڈھی کے بیشتر علاقوں میں لوگوں کو مشکلات کا سامنا تھا جنہیں بتدریج دور کرنے کے لئے ضروری اقدامات کئے جا رہے ہیں اور ہماری خواہش ہے کہ لوگوں کے مسائل جلد از جلد حل ہوں اور اطمینان کے ساتھ اپنے روزمرہ امور انجام دے سکیں، انہوں نے کہا کہ لانڈھی کورنگی صنعتی زونز سے لاکھوں افراد کا روزگار وابستہ ہے اور ان علاقوں میں بنیادی سہولیات کی فراہمی اولین ترجیح ہے، لوگوں کے تعاون سے تمام مسائل حل کریں گے۔

loading...