اشاعت کے باوقار 30 سال

اپنی لڑائی میں لبنان کو استعمال نہ کریں

اپنی لڑائی میں لبنان کو استعمال نہ کریں

بیروت: لبنان کی تنظیم حزب اللہ نے سعودی عرب پر لبنان کے خلاف جنگ مسلط کرنے کا الزام عائد کیا ہے جب کہ امریکہ نے اپنی لڑائی میں لبنان کو استعمال کرنے والے ممالک کو خبردار کیا ہے۔ یہ بیان لبنانی وزیر اعظم سعد الحریری کے سعودی عرب کے دارالحکومت میں استعفی کے اعلان کے بعد سامنے آیا ہے۔ ایک ٹیلی ویڑن تقریر میں حزب اللہ کے رہنما حسن نصراللہ نے زور دیا کہ حریری کا استعفیٰ لبنانی سیاست میں ’بے مثال سعودی مداخلت‘ تھی۔ انھوں نے کہا کہ سعودی حکومت نے لبنانی وزیر اعظم سعد الحریری کو ان کی مرضی کے خلاف وہاں رکھا ہوا ہے۔ حزب اللہ کے رہنما حسن نصراللہ نے سعودی عرب پر یہ الزام بھی عائد کیا کہ وہ اسرائیل کو لبنان کے خلاف اکسا رہا ہے۔ ادھر امریکی وزیر خارجہ ریکس ٹلرسن نے اْن ممالک کو خبردار کیا ہے جو لبنان کو اپنی جنگ لڑنے کے لیے استعمال کر رہے ہیں۔ اْن کا مزید کہنا تھا کہ امریکہ لبنان کی آزادی کی بھرپور حمایت کرتا ہے۔ خدشہ ہے کہ لبنان سعودی عرب اور ایران کے درمیان وسیع علاقائی تنازع مزید الجھ سکتا ہے کیونکہ سعد حریری کے مستعفیٰ ہونے کے بعد سے تینوں ممالک کے درمیان کشیدگی بڑھی ہے۔

loading...