اشاعت کے باوقار 30 سال

ن لیگ میں نورا کشی چل رہی ہے

ن لیگ میں نورا کشی چل رہی ہے

لاہور: پاکستان تحریک انصاف کے سیکرٹری اطلاعات شفقت محمود نے کہا ہے کہ شہباز شریف پر سانحہ ماڈل کے 14 لوگوں کے قتل کا الزام ہے، حدیبیہ کا کیس بھی شہباز شریف کے خلاف بڑا ثبوت ہے ، ہسپتالوں کا برُا حال جس نے گڈ گورننس کا بھانڈا پھوڑ دیا ہے ، عوام کو پینے کا صاف پانی نہیں مل رہا ، بڑے پراجیکٹس دکھاوا اور صرف مال بنانے کے لیے ہیں، ایک سال کے اندر پانچ ارب روپے کی ایکسپورٹ میں کمی ہوئی ہے، ایک سال کے دوران ملک پر ریکارڈ قرضے بڑھ گئے ہیں ، تحریک انصاف کا قبل از وقت الیکشن کا مطالبہ درست ہے ۔
چیئرمین سیکرٹریٹ گارڈن ٹاﺅن میں ممبر پنجاب اسمبلی میاں اسلم اقبال، نعمان چٹھہ اور چوہدری نوید اشرف سمیت دیگر راہنماؤں کے ہمراہ پریس کانفر نس کرتے ہوئے شفقت محمود کا کہنا تھا کہ نواز شریف کی نااہلی کے بعد (ن) لیگ میں نورا کشی چل رہی ہے ، جس کا زندہ ثبوت ریاض پیرزادہ کی پریس کانفرنس ہے، پنجاب میں( ن) لیگ کے وزراء بھولے بھٹکے پھر رہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ نواز شریف اور شہباز ایک ہی سکے کے دو رخ ہیں اور دونوں ایک دوسرے کے لیے لازم و ملزوم ہیں، نواز شریف اور مریم نواز اداروں سے ٹکراﺅ چاہتے ہیں، جب کہ نواز شریف اور شہباز شریف کے بچوں میں بادشاہت کی جانشینی کی جنگ جاری ہے ، شہباز شریف پر ماڈل ٹاﺅن سانحہ کے 14 لوگوں کے قتل کا الزام ہے، حدیبیہ کا کیس بھی شہباز شریف کے خلاف بڑا ثبوت ہے ۔شفقت محمود نے کہا کہ شہباز شریف عوام کی آنکھوں میں دھول جھونک رہے ہیں اور سب اچھا کا راگ الاپ رہے ہیں جب کہ پنجاب میں ہسپتالوں اور سکولوں کا بُرا حال ہے ، عورتیں ہسپتالوں کے باہر سڑکوں پر بچوں کو جنم دے رہی ہیں ، ان واقعات نے پنجاب گورنمنٹ کی گڈ گورننس کا بھانڈا پھوڑ دیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ عوام کو پینے کا صاف پانی نہیں مل رہا ، (ن) لیگ کی حکومت بڑے بڑے پراجیکٹس دکھاوے اور مال بنانے کے لیے شروع کرتی ہے ، ان کی اکنامک اور ترقیاتی پرفارمنس زیرو ہے، نواز شریف اور پاکستانی قوم پچھلے تیس سال سے شریف فیملی پر فرد جرم عائد ہونے کا انتظار کر رہی تھی ، نواز شریف کا نام بھی ای سی ایل پر ڈالا جائے اور ان کے خلاف کیسز کی جلد تحقیقات مکمل کی جائیں ۔ شفقت محمود نے کہا کہ ایک سال کے اندر پانچ ارب روپے کی ایکسپورٹ کم ہوئی اور ایک سال کے دوران ریکارڈ قرضے بڑھ گئے ہیں ، ان حالات میں تحریک انصاف کا قبل از وقت الیکشن کا مطالبہ درست ہے ، ہم سمجھتے ہیں کہ ملک میں سیاسی خلاء موجود ہے ، الیکشن کمیشن کا عمران خان پر توہین عدالت کا الزام درست نہیں ۔ انہوں نے کہا کہ مریم نواز کہتی ہیں کہ یہ ڈکٹیٹر شپ ہے، دو صوبوں پنجاب ، بلوچستان اور وفاق میں (ن) لیگ کی حکومت ہے تو پھر ڈکٹیٹر شپ بھی آپ کی ہوئی، سپریم کورٹ کے سامنے جائیدادوں کا حساب دینے کے لئے کچھ بھی نہیں، اقامہ کا مقصد اکاؤنٹ بنا کر پیسے لینا ہے ، (ن) لیگ کے باقی لوگوں نے بھی اقامہ اسی مقصد کے لیے لیا ہوا ہے ، کوئی گارڈ تو کوئی اکاؤنٹ منیجر بنا بیٹھا ہے۔ شفقت محمود نے کہا کہ حسن نواز طالب علم ہو کر اربوں کے مالک بن چکے
ہیں، عمران خان اور نوا زشریف کیس میں کوئی مماثلت نہیں ہے ، عمران خان نے کرکٹ کے کھیل کر پیسہ کمایا اور وہ بھی کسی پبلک عہدہ پر فائز نہیں رہے، عمران خان پیسہ پاکستان میں لائے جب کہ نواز شریف نے پبلک عہدے کا غلط استعمال کیا اور اربوں روپے کی کرپشن سے بیرون ملک جائیدادیں بنائیں، ان سے حساب مانگا جائے مگر ان کا نواز شریف سے موازنہ درست نہیں، ہم آئین اور قانون پر یقین رکھتے ہیں ، ہم نے قبل از وقت الیکشن کا مطالبہ کیا ہے ، ہم سمجھتے ہیں کہ ملک میں سیاسی خلاء موجود ہے ، عمران خان کے خلاف الیکشن کمیشن کا توہین عدالت کا الزام بھی درست نہیں ہے ۔

loading...