اشاعت کے باوقار 30 سال

بھارت کشمیر میں ایک ہاری جنگ لڑ رہا ہے

بھارت کشمیر میں ایک ہاری جنگ لڑ رہا ہے

سرینگر: کل جماعتی حریت کانفرنس ’’گ‘‘ گروپ کے چیئرمین سید علی گیلانی نے شوپیان، ترال اور جنوبی کشمیر کے مضافات میں فوجیوں کے ہاتھوں عسکریت پسندوں کے گھروں کی توڑ پھوڑ کرنے اور ان کے رشتہ داروں کی گرفتاری کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ قابض افواج نے ہر حد پار کر لی ہے اپنے ایک بیان میں انہوں نے کارروائی کو بلاجواز قرار دیتے ہوئے کہا کہ فوجی کئی مجاہدین اور دیگر شہریوں کے گھروں میں گھس گئے اور مکینوں کی پٹائی کرنے کے علاوہ اسباب خانہ کی توڑ پھوڑ کی انہوں نے فوجی کارروائی کو انسانیت سوز اور سرکاری دہشت گردی سے تعبیر کرتے ہوئے کہا کہ اس کا کوئی جواز نہیں اور جو لوگ میدان کارزار میں ہیں ان کے اہل خانہ کو انتقام کا نشانہ بنانا کسی بھی قاعدے قانون کی رو سے جائز نہیں انہوں نے عام لوگوں اور عسکریت پسندوں کو اس طرح کی کارروائیوں کا نشانہ بنانے پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ایک منصوبے کے تحت ریاست میں خانہ جنگی کو ہوا دی جارہی ہے انہوں نے کہا کہ بھارت کشمیر میں ایک ہاری ہوئی جنگ لڑ رہا ہے کیونکہ وہ یہاں کے عوام کے جذبہ آزادی کو توڑ نے میں ناکام ہو چکا ہے اور اس ناکامی کو چھپانے کے لیے اب بھارت نت نئے حربے آزما کر یہاں کے عوام کو زیر کرنا چاہتا ہے۔

loading...