اشاعت کے باوقار 30 سال

شیخ عبداللہ بن علی آل ثانی کے تمام اثاثے منجمد

شیخ عبداللہ بن علی آل ثانی کے تمام اثاثے منجمد

دوحہ: قطری حکومت نے مبینہ طور پر حکمراں خاندان کی معروف شخصیت شیخ عبداللہ بن علی آل ثانی کے تمام اثاثے منجمد کر لیے ہیں۔ ان کے خلاف یہ اقدام امیر قطر شیخ تمیم کی حالیہ خلیج بحران کے دوران میں پالیسیوں کی مخالفت کی پاداش میں کیا گیا ہے ۔شیخ عبداللہ بن علی آل ثانی نے ہفتے کے روز ایک ٹویٹ میں اطلاع دی ہے کہ ’’ قطری حکومت نے مجھے یہ اعزاز بخشا ہے، اس نے میرے تمام بنک کھاتے منجمد کر لیے ہیں۔میں اس اعزاز پر ان کا ممنون ہوں اور میں یہ اعزاز مادرِ وطن کو سونپتا ہوں انھوں نے کہا ہے کہ میں یہ توقع کرتا ہوں کہ قطر موقع پرستوں اور مفادپرست دوستوں کو نکال باہر کرے گا اور دوبارہ خلیج کے دھارے میں لوٹ آئے گا واضح رہے کہ شیخ عبداللہ بن علی آل ثانی نے گذشتہ ماہ اپنے ہم وطنوں کے نام ایک پیغام میں ان سے اپیل کی تھی کہ وہ امن کے پیغامبروں کے ساتھ متحد ہو جائیں۔ انھوں نے قطری عوام سے کہا تھا:’’ میں آپ کو دعوت دیتا ہوں کہ دانش اور امن کے پیغامبروں سے ملیں اور دلوں کو ملانے کی وکالت کریں ۔ عرب میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ قطر بحران سے صورت حال بد سے بدتر ہوتی جا رہی ہے اور یہ ہمیں ایک ایسی قسمت کی طرف دھکیل رہی ہے جو ہم نہیں چاہتے ہیں۔ انھوں نے یہ بھی کہا تھا کہ سعودی عرب کے فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز قطر اور اس کے عوام کا تحفظ چاہتے ہیں۔

loading...