اشاعت کے باوقار 30 سال

ہم لگژری ٹرینوں کے لائق نہیں

 ہم لگژری ٹرینوں کے لائق نہیں

ممبئی۔ گزشتہ ہفتہ وارانسی اور بڑودہ کے درمیان چلائی جانے والی لگژری ٹرین مہامنا ایکسپریس کے پائیدان اور نل تک چوری کر لیے گئے ہیں۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے اس ٹرین کو گزشتہ ہفتے ویڈیو لنک کے ذریعے شروع کیا ہے۔ اس سے قبل تیجیس ایکسپریس میں بھی اشیاء چوری ہوئی تھیں اور اب ایک بار پھر وارانسی۔بڑودہ کے درمیان چلنے والی مہامنا ایکسپریس میں بھی چوری کی خبر آ رہی ہے۔ واضح رہے کہ جب مہامنا ایکسپریس کی پہلا سفر مکمل کر کے وارانسی سے بڑودہ پہنچی تو ٹرین یارڈ میں ٹرین کو دیکھ کر حکام کے ہوش اڑ گئے، بتایا جا رہا ہے کہ ٹرین کے پہلے سفر کے بعد ہی کمپارٹمنٹ سے 3 نل، 4 شاور جیٹ اور کمپارٹمنٹ کے درمیان میں لگے 2 پائیدان بھی چوری ہو چکے تھے۔ اس کے علاوہ، نشستوں اور بیت الخلاء کی حالت بہت خراب تھی ۔ نشستوں پر اسکریچ اور کچھ آئینے تقریبا ٹوٹ گئے تھے۔ ریلوے حکام کا کہنا ہے کہ اس کے بارے میں کوئی معلومات موجود نہیں ہے ،یہ کس نے کیا ہے ، لیکن جنہوں نے بھی ایسا کیا ہے، یقینی طور پر انہیں عوامی املاک کی کوئی قدر نہیں ہے۔ ویسٹرن ریلوے کے چیف پی آر اورویندر بھاکر نے کہا کہ ہم مسافروں کو جدید سہولیات فراہم کرنے کے لئے اپنی پوری کوشش کر رہے ہیں، یہ بہت بدقسمتی ہے کہ کچھ لوگوں نے کوچوں سے نل اور شاور جیٹ چوری کر لیے اور کوچوں کی حالت بھی خراب تھی۔

loading...