اشاعت کے باوقار 30 سال

امریکی کھلاڑی ٹرمپ کے خلاف اٹھ کھڑے ہوئے

 امریکی کھلاڑی ٹرمپ کے خلاف اٹھ کھڑے ہوئے

واشنگٹن: امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو اپنے ایک متنازع بیان کے باعث قومی فٹ بالر اور باسکٹ بالرز کی جانب سے کڑی تنقید کا سامنا ہے جس میں انہوں نے معروف قومی کھلاڑیوں میں نسلی امتیاز برتتے ہوئے انہیں وائٹ ہاؤس بلانے سے انکار کر دیا تھا۔ امریکی نشریاتی ادارے سی این این کے مطابق ٹرمپ پر یہ تنقید امریکا کی معروف فٹ بال لیگ این ایف ایل (نیشنل فٹ بال لیگ) اور این بی اے (نیشنل باسکٹ بال ایسوسی ایشن) کے کھلاڑیوں اور حکام نے کی ہے جنہوں نے کہا ہے کہ ٹرمپ نے تاحال نسلی تنازعات کو برقرار رکھا ہوا ہے۔ ٹرمپ نے اپنے ایک حالیہ بیان میں چند امریکی فٹ بالر اور باسکٹ بال کے کھلاڑیوں کو سخت تنقید کا نشانہ بنایا اور نسلی بنیاد پر انہیں وائٹ ہاؤس آںے کی دعوت دینے سے انکار کیا تھا ساتھ ہی انہوں نے این ایف ایل اور این بی اے کے کئی کھلاڑیوں کو نشانہ بھی بنایا تھا۔ نیشنل فٹ بال لیگ کے کمشنر راجر گڈیل نے ہفتے کو جاری کردہ بیان میں ٹرمپ کو نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ ٹرمپ نے ریاست الباما میں جمعے کی رات کیے گئے خطاب میں قوم کو تقسیم کر دیا۔ اسی طرح دنیا کے معروف ایتھلیٹ لی برون جیمس نے ٹوئٹ میں ٹرمپ پر تنقید کی اور کہا ہے کہ گولڈن اسٹیٹ واریئر اسٹیفن کوری کو وائٹ ہاؤس آنے کی دعوت نہ دینا درست عمل نہیں۔ لی برون جیمس کا یہ بیان اس وقت سامنے آیا ہے جب گولڈن اسٹیٹ واریئر اسٹیفن کوری نے سوشل میڈیا پر بتایا کہ ٹرمپ نے انہیں آنے کی دعوت نہیں دی۔ گولڈن اسٹیٹ واریئر اسٹیفن کوری نے کہا ہے کہ جب تک تمام کھلاڑیوں کو مساوات کے ساتھ وائٹ ہاؤس آنے کی دعوت نہیں دی جائے گی اس وقت تک عدم مساوات کا یہ تنازع ختم نہیں کریں گے۔ لاس اینجلس کے سابق باسکٹ بال اسٹار کوب برائنٹ نے بھی ٹرمپ کے خلاف اس بغاوت میں حصہ لیا اور سماجی رابطے کی سائٹ پر کہا کہ ایک شخص جو تنہا ہی تنازعات اور تقسیم کو پیدا کرتا ہے اس کے الفاظ تناؤ اور نفرت کو پیدا کرتے ہیں جس کے بعد ممکن نہیں کہ ہم امریکا کو دوبارہ عظیم تر بنا سکیں۔ دوسری جانب امریکی صدر ٹرمپ نے کھلاڑیوں کی اس تنقید کے تسلسل کے جواب میں کہا کہ کھلاڑیوں کو اس بات کی اجازت نہیں دی جائے گی کہ وہ امریکی پرچم اور امریکا کی بے توقیری کریں، ایسے کھلاڑیوں کو فوری طور پر اور بلا خوف و خطر لیگ سے برطرف کر دینا چاہیے۔ ٹرمپ نے نیشنل فٹ بال ایسوسی ایشن کے کمشنر راجر گڈیل کی تنقید پر کہا کہ این ایف ایل چیف نے بیان دے کر صرف یہ جتانے کی کوشش کی ہے کہ کھلاڑیوں کے ساتھ بے توقیری کی جارہی ہے ۔ واضح رہے کہ این ایف ا یل’’نیشنل فٹ بال لیگ‘‘امریکا کی پروفیشنل فٹ بال لیگ ہے جس میں 32 ٹیمیں شامل ہیں اور عوامی سطح پر ان کے کھلاڑیوں کی بڑی عزت کی جاتی ہے، راجر گڈیل اس کے کمشنر ہیں۔

loading...