اشاعت کے باوقار 30 سال

ایمنسٹی انٹرنیشنل کی رپورٹ حکمرانوں کے لئے چشم کشا ہے

ایمنسٹی انٹرنیشنل کی رپورٹ حکمرانوں کے لئے چشم کشا ہے

سرینگر : کل جماعتی حریت کانفرنس’’گ‘‘ گروپ کے چیئرمین سید علی گیلانی نے ایمنسٹی انٹرنیشنل برائے ہند کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر اکارپٹیل کی طرف سے ریاست جموں کشمیر میں بھارت کی نیم فوجی دستوں سی آر پی ایف اور پولیس ٹاسک فورس کے ہاتھوں پرامن عوامی احتجاجی جلسوں کو روکنے کے لئے پیلٹ گن اور دیگر مہلک ہتھیار استعمال کرنے پر پابندی عائد کرنے کے مطالبے کو سراہتے ہوئے کہا کہ ریاست کے جن لوگوں کے خلاف آنکھوں کی بینائی سے محروم کرنے ‘ معذور بنانے اور قتل و غارت گری کی کارروائیوں کو روا رکھا جا رہا ہے ان کا واحد قصور یہ ہے کہ وہ پچھلے 70 برسوں سے حق خود ارادیت کا مطالبہ کرتے ہوئے آئے ہیں ۔ اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ ایمنسٹی انٹرنیشنل کی طرف سے پیش کردہ رپورٹ کو بھارت کے ارباب اقتدار اور ریاست کے حکمران جماعتوں کے لئے چشم کشا ہونا چاہئے جن کے ظالم ہاتھوں سے یہ جنت نما سرزمین جہنم زار بنی ہوئی ہے ۔ انہوں نے ریاست کی مقامی انسانی حقوق کی رضاکار تنظیموں سے امید ظاہر کی کہ وہ یہاں کے حکمرانوں ‘ مسلح افواج اور نیم فوجی دستوں کی طرف سے جملہ انسانی حقوق کی پامالیوں کا ریکارڈ شفافیت کے ساتھ جمع کر کے بیرون ریاست کی انسان دوست شخصیات اور مقتدر عالمی اداروں تک پہنچانے کا فریضہ انجام دیں تاکہ بیرون دنیا کے لوگوں کو بھارت کے زیر تسلط جموں کشمیر کے عوام کے ساتھ ہو رہی ناانصافیوں اور رونگٹے کھڑا کرنے والے مظالم سے واقفیت حاصل کر کے ہماری اخلاقی حمایت کرنے پر راغب کیا جا سکے ۔

loading...