اشاعت کے باوقار 30 سال

آج کا دن تاریخ میں

آٹھواں سیارہ دریافت ہوا

پی سی بی اور پاکستانی سیکیورٹی ایجنسیاں قابل تعریف ہیں

پی سی بی اور پاکستانی سیکیورٹی ایجنسیاں قابل تعریف ہیں

لاہور: انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کے چیف ایگزیکٹیو ڈیوڈ رچرڈسن نے ورلڈ الیون کے دورے کے لئے پاکستان کرکٹ بورڈ اور سکیورٹی ایجنسیوں کی تعریف کی ہے جبکہ چیئرمین پی سی بی شہریار خان کا کہنا تھا کہ وہ ٹیمیں جو پاکستان کے ساتھ کرکٹ نہیں کھیل رہی وہ نا صرف اپنی کرکٹ کا نقصان کر رہے ہیں، بلکہ کرکٹ سے محبت کرنے والی اپنی عوام کی خواہشات کا بھی نقصان کر رہے ہیں۔ لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے پاکستانی عوام کا میچ کو سپورٹ کرنے پر شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ سکیورٹی کا مسئلہ پوری دنیا کا ہے، تمام ممالک اور کھیل اس سے متاثر ہوئے تاہم یہ سیریز یقینی طور پر پاکستان میں ہر قسم کی بحالی میں مدد گار ہو گی۔ انہوں نے کہا کہ جائلز کلارک نے پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ کی بحالی کے لئے بہت کام کیا، کرکٹ فیملی اب بھی یکجا ہے اور انٹرنیشنل کرکٹ کی بحالی میں ایک ساتھ ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ اب ہماری توجہ پی ایس ایل کے میچز پاکستان میں کرانے اور دیگر رکن ممالک کو پاکستان میں کھلانے پر ہے، سب صحیح چلتا رہا تو آئی سی سی ایونٹ بھی پاکستان میں ہو سکتے ہیں۔ ڈیو رچرڈسن کا کہنا تھا کہ اگر بھارتی کرکٹ بورڈ پاکستان سے کھیلنے کے لیے راضی نہیں تو ہم انہیں مجبور نہیں کر سکتے انہوں نے کہا کہ پاکستان میں حالات بہتر ہوئے ہیں، ہماری توجہ رکن ملکوں کو پاکستان میں کھلانا ہے، ہماری توجہ پی ایس ایل کے میچز پاکستان میں کروانا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ سیکیورٹی پوری دنیا کا مسئلہ ہے تمام ممالک اور کھیل اس سے متاثر ہیں، پاکستان کرکٹ بورڈ اور پاکستان کی سیکیورٹی ایجنسیاں قابل تعریف ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ سیریز یقینی طور پر پاکستان میں ہر قسم کی بحالی میں مدد گار ہو گی، جائلز کلارک نے پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ کی بحالی کے لئے بہت کام کیا، کرکٹ فیملی یکجا ہے اور انٹرنیشنل کرکٹ کی بحالی میں ایک ساتھ ہیں۔ پریس کانفرنس سے خطاب کے دوران پی سی بی کے چیرمین نجم سیٹھی کا کہنا ہے کہ وہ ٹیمیں جو پاکستان کے ساتھ کرکٹ نہیں کھیل رہی وہ نا صرف اپنی کرکٹ کا نقصان کر رہے ہیں، بلکہ کرکٹ سے محبت کرنے والی اپنی عوام کی خواہشات کا بھی نقصان کر رہے ہیں۔ کہ آئی سی سی کے تعاون سے آزادی کپ ممکن ہوا، دنیا کو سمجھنا ہو گا کہ پاکستان ایک پر امن ملک ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ہم آئی سی سی چیمپئینز ٹرافی جیت چکے، اب اگلا ہدف ورلڈ کپ ہے۔ نجم سیٹھی کا کہنا تھا کہ ورلڈ الیون کے بعد دوسری ٹیمیں بھی پاکستان آئیں گی، میرے اس پلان کو جائلز کلارک اور آئی سی سی نے بہت سپورٹ کیا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ کل کے میچ میں آئی سی سی زندہ باد کے نعرے بھی لگے۔ بھارت کے سیریز کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ ان سے بہت ڈائیلاگ کر لئے اب آئی سی سی اس حوالے میں اپنا کردار ادا کرے۔