اشاعت کے باوقار 30 سال

چین کا دریائے برہم پترا کا ڈیٹا بھارت کے ساتھ شیئر کرنے سے انکار

چین کا دریائے برہم پترا کا ڈیٹا بھارت کے ساتھ شیئر کرنے سے انکار

بیجنگ: چین نے دریائے برہم پترا کا ہائیڈرولوجیکل ڈیٹا بھارت کے ساتھ شیئر کرنے سے انکار کر دیا۔ ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق چینی وزارت خارجہ کی ترجمان نے صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ایک عرصہ تک انہوں نے دریا کے ڈیٹا پر بھارت کے ساتھ تعاون کیا ہے۔ چینی سائیڈ پراپ گریڈیشن کے کام کی وجہ سے فوری طور پر بھارت کے ساتھ ڈیٹا شیئر نہیں کیا جا سکتا۔ گزشتہ ماہ بھارتی ماہرین نے کہا تھا کہ ڈوکلم کے مسئلے کی وجہ سے چین نے ہائیڈرولوجیکل ڈیٹا روک لیا ہے۔ واضع رہے کہ دریائے برہم پترا چینی علاقے تبت سے نکلتا ہے اور بھارتی ریاستوں اروناچل پردیش اور آسام میں بہتا ہے۔

loading...