اشاعت کے باوقار 30 سال

وینزویلا کا ڈالر میں تیل فروخت نہ کر نے کا اعلان

وینزویلا کا ڈالر میں تیل فروخت نہ کر نے کا اعلان

کراکس: وینزویلاکے صدر نکولس مدورو نے گزشتہ روز اعلان کیا ہے کہ ان کی حکومت ڈالر سے ہٹ کر دیگر کرنسیوں میں تیل اور دیگر اشیاء فروخت کرے گی، یہ اقدام نبرد آزما ملک پر امریکہ کی جانب سے عائد کردہ پابندیوں سے نمٹنے کی ایک کوشش ہے ۔ایک نشریاتی ادارے کو انٹرویو کے دوران انہوں نے کہا کہ میں نے تیل گیس ،سونا اور دیگر اشیاء جو وینزویلا فروخت کرتا ہے ، چینی یوان، جاپانی ین، روسی ربیل، ایرانی روپے سمیت دیگر نئی کرنسیوں میں بیچنے کا عمل شروع کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ان کا کہنا تھا امریکی استعماری نظام سے آزادی ممکن ہے۔ واشنگٹن کی جانب سے کراکس پر عائد کی گئی نئی پابندیوں کے تحت امریکی بینک حکومت کی جانب سے جاری کردہ نئے بانڈز میں لین دین نہیں کر سکتے، یا سرکاری تیل کمپنی پی ڈی وی ایس اے کے ساتھ بھی لین دین پر پابندی ہے۔ اس کا مقصد وینزویلا کی اہم بانڈ اور ایکویٹی مارکیٹ تک رسائی روکنا ہے۔ وائٹ ہاؤس کا کہنا ہے کہ اس کا مقصد مدورو کی آمریت کو مسترد کرنا ہے جو کہ ان کی غیر آئینی حکمرانی کو برقرار رکھنے کے لئے مالی مدد کا اہم ذریعہ ہے۔

loading...