اشاعت کے باوقار 30 سال

کاروبار کے پہلے روز پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں تیزی

کاروبار کے پہلے روز پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں تیزی

Location

کراچی: کاروبار کے پہلے روز پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں تیزی کا رحجان دیکھا گیا اور کے ایس ای 100 انڈیکس 44500 پوائنٹس کی سطح سے بڑھ کر 46000 پوائنٹس پر بند ہوا۔ تیزی کے سبب مارکیٹ کے سرمائے میں 33 ارب سے زائد روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔ پیر کو کاروبار کے اختتام پر کے ایس ای 100 انڈیکس میں 98.42 پوائنٹس کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس سے کے ایس ای 100 انڈیکس 45912.03 پوائنٹس سے بڑھ 46010.45 پوئنٹس پر جا پہنچا اسی طرح کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس 32438.03 پوائنٹس سے بڑھ کر 32553.38 پوائنٹس ہو گیا جبکہ 16.37 پوائنٹس کی کمی سے کے ایس ای 30 انڈیکس 23837.63 پوائنٹس پر بند ہوا۔ کاروباری تیزی کے سبب مارکیٹ کے سرمائے میں 33 ارب 30 کروڑ 3 لاکھ 65 ہزار 168 روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس کے نتیجے میں سرمائے کا مجموعی حجم 95 کھرب 14 ارب 9 کروڑ 55 لاکھ 11 ہزار 292 روپے سے بڑھ کر 95 کھرب 47 ارب 39 کروڑ 58 لاکھ 76 ہزار 460 روپے ہو گیا۔ پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں پیر کے روز 31 کروڑ 91 لاکھ 35 ہزار حصص کے سودے ہوئے اور ٹریڈنگ ویلیو 18 ارب روپے تک محدود رہی گزشتہ جمعہ 32 کروڑ 77 لاکھ 56 ہزار حصص کے سودے ہوئے تھے اور ٹریڈنگ ویلیو 21 ارب روپے ریکارڈ کی گئی تھی۔ پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں پیر کے روز مجموعی طور پر 396 کمپنیوں کا کاروبار ہوا جس میں سے 275 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ، 104 میں کمی اور 17 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔ کاروبار کے لحاظ سے ازگارڈ نائن 3 کروڑ 31 لاکھ، کے الیکٹرک لمیٹڈ 1 کروڑ 97 لاکھ، سوئی سدرن گیس کمپنی 1 کروڑ 82 لاکھ، ٹی آر جی پاک لمیٹڈ 1 کروڑ 55 لاکھ اور عائشہ اسٹیل مل 1 کروڑ 18 لاکھ حصص کے سودوں سے سرفہرست رہے۔ قیمتوں میں اتار چڑھاؤ کے اعتبار سے یونی لیور فوڈز کے بھاؤ میں 131.50 روپے اور سنوفی ایونٹس کے بھاؤ میں 83.06 روپے کا اضافہ جبکہ فلپس مورس پاک کے بھاؤ میں 145.64 روپے اور سپائیر ٹیکسٹائل کے بھاؤ میں 99.98 روپے کی نمایاں کمی ریکارڈ کی گئی۔

loading...