اشاعت کے باوقار 30 سال

ایک نو عمر قاتل کو بالغ قاتل کے لئے مقرر عمر قید کی سزا

ایک نو عمر قاتل کو بالغ قاتل کے لئے مقرر عمر قید کی سزا

ریجینا میں ایک 19 سالہ نوجوان کو اپنی سابقہ گرل فرینڈ حنا لیفلار کو چھرے کے دس وار کر کے موت کے گھاٹ اتار دینے پر قاتل کو یہ کہہ کر عمر قید کی سزا دی کہ قاتل کا یہ عمل ایک نو عمر کے لئے مقرر سزا سے زیاد ہ کا مستحق ہے ۔ جسٹس جینیفر پریچرڈ نے فیصلہ سناتے ہوئے کہا کہ آج پہلی مرتبہ قاتل کو اس کے نام سے پکارا جا سکے گا۔ کینیڈا کے قانون کے تحت کسی بھی نوعمر کے خلاف مقدمے کی رپورٹنگ کرتے وقت اس کا نام ظاہر کرنے کی اجازت نہیں ہے۔ جسٹس پریچرڈ نے فیصلہ سناتے ہوئے کہا کہ جب سکائی لار پراکنر سے یہ جرم سرزد ہوا تو اس کی عمر 16 سال تھی اس لئے اسے نوعمر بچوں کے لئے مقرر سزا دی جانی چاہئے تھی مگر جرم کی گرانی کو دیکھ کر غیر معمولی حالات کے پیش نظر اسے بالغوں کے لئے مقرر سزا سنائی جا رہی ہے۔ اس سزا میں دس سال تک کسی پیرول کی گنجائش نہیں رکھی گئی۔ اس سے قبل پراکنر نے اپنے جرم کا اعتراف کر لیا تھا اور اس کے چہرے سے کسی پچھتاو ے کا اظہار نہ ہوتا تھا۔