اشاعت کے باوقار 30 سال

پاکستان سیکیورٹی پرنٹنگ کارپوریشن اسٹیٹ بینک کو فروخت

پاکستان سیکیورٹی پرنٹنگ کارپوریشن اسٹیٹ بینک کو فروخت

اسلام آباد: امریکی حکومت کی جانب سے کولیشنسپورٹ فنڈ (سی ایس ایف) روکے جانے بعد ریونیو کی کمی کو پورا کرنے کے لئے حکومت نے پاکستان سیکیورٹی پرنٹنگ کارپوریشن جیسا منافع بخش ادارہ چپکے سے اسٹیٹ بینک کو 100 ارب روپے میں فروخت کر دیا میڈیا رپورٹس کے مطابق ادارے کی تمام تر ذمہ داریاں گزشتہ ماہ اسٹیٹ بینک کو سونپ دی گئی تھی جس کی وزارت خزانہ اور اسٹیٹ بنک حکام بھی تصدیق کر چکے ہیں پرنٹنگ کارپوریشن اب اسٹیٹ بینک کے ماتحت ادارے کے طور پر کام کرے گا 1949 میں قائم ہونے والا یہ ادارہ حکومت پاکستان کی ملکیت اور وزارت خزانہ کے ماتحت تھا جس کی ذمہ داریوں میں کرنشی نوٹوں کے علاوہ سیکیورٹی دساویزات کی پرنٹنک شامل ہیں مالی سال 2015-16 میں اسٹیٹ بینک نے پاکستان سیکیورٹی پرنٹنگ کارپوریشن کو بینک نوٹ کی پرنٹنگ کی مد میں 17.73 روپے کی ادائیگی کی تھی فروخت کے بعد اسٹیٹ بینک حکومت کو 100 ارب روپے خسارے کو جی ڈی پی کے 5 فیصد تک رکھنے میں مددگار تو ہو گا تاہم اس کے باوجود یہ پارلیمنٹ کی جانب سے منظور کردہ جی ڈی پی ٹارگٹ 3.8 فیصد سے زیادہ ہے واضح رہے وزارت خزانہ نے سرکاری اثاثے کی فروخت کے لئے وفاقی حکومت سے منظوری لی تھی جبکہ وفاقی کابینہ نے اس حوالے سے منقد کئے گئے اجلاس کے بعد جاری کردہ پریس ریلیز میں اس سرگرمی کا ذکر نہیں کیا تھا جس سے ظاہر ہوتا کہ حکومت اس سودے کو خفیہ رکھنا چاہتی تھی۔

loading...