اشاعت کے باوقار 30 سال

جسپریت بمراہ کے دادا گزر بسر کے لئے رکشہ چلانے پر مجبور

جسپریت بمراہ کے دادا گزر بسر کے لئے رکشہ چلانے پر مجبور

نئی دہلی: بھارتی فاسٹ بولر جسپریت بمراہ نے زندگی میں شہرت اور دولت حاصل کر لی ہے لیکن ان کے معمر دادا آج بھی رکشہ چلا کر اپنی گزر بسر کر رہے ہیں۔ احمد آباد کے شہر اترکھنڈ کے رہائشی 84 سالہ سنتوک سنگھ بڑی بزنس چین کے مالک تھے اور ان کی اپنی 3 فیکٹریاں تھیں، ان کے بیٹے جسویر سنگھ (جسپریت بمراہ کے والد) ان کا کاروبار سنبھالتے تھے، جسویر کی وفات کے بعد سنتوک سنگھ ٹوٹ گئے اور کاروبار پر توجہ نہ دے پانے کی وجہ سے قرضوں تلے دب گئے۔ کاروبار ٹھپ ہونے پر وہ 10 سال قبل اودھم سنگھ نگر منتقل ہوئے اور کرائے کے مکان میں رہائش اختیار کی، آج کل وہ گزر بسر کے لیے رکشہ چلا تے ہیں۔ وہ اپنے بیٹے کی فیملی کی دیکھ بھال نہ کر سکے اور جسپریت کی والدہ ان کو لے کر گجرات چلی گئیں۔ سنتوک سنگھ نے کہا کہ اپنے پوتے کو ٹی وی پر بولنگ کرتے دیکھ کر خوش ہوتا ہوں، مرنے سے قبل ایک بار اس سے ملنا چاہتا ہوں۔