اشاعت کے باوقار 30 سال

آج کا دن تاریخ میں

کولڈ ڈرنکس دانتوں کے ساتھ کیا کرتی ہیں؟

کولڈ ڈرنکس دانتوں کے ساتھ کیا کرتی ہیں؟

اگر تو آپ کو سافٹ ڈرنکس بہت زیادہ پسند ہے تو جان لیں کہ ان کا زیادہ استعمال دانتوں کی خوبصورتی ختم کرنے بلکہ انہیں بدنما بنانے کا باعث بنتا ہے۔ یہ بات امریکا میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی۔ سان ڈیاگو سے تعلق رکھنے والے ایک ڈنٹیسٹ ڈاکٹر ٹام بائیر مین نے اس حوالے ایک تجربہ کیا تھا۔ اس تجربے کے دوران انہوں نے 1950 کے اس نظریے کو آزمانا چاہتا تھا جس کے مطابق پندرہ دن تک کسی دانت کو مشروب میں ڈبونا ہی اس کو تباہ کرنے کے لیے کافی ہوتا ہے بلکہ اس کو اکثر پینا دانتوں کے ٹوٹنے کا باعث بن سکتا ہے۔ ڈاکٹر ٹام نے عمر کی تیسری دہائی میں اپنا کچھ دانت نکلوائے تھے اور تجربے کے لیے انہیں استعمال کیا گیا۔ انہوں نے ایک دانت ایک انرجی ڈرنک میں ڈبو دیا جبکہ دوسرا ریگولر کوک کی بوتل ، تیسرا ڈائٹ مشروب جبکہ چوتھا پانی کے گلاس میں ڈال دیا۔ دو ہفتے بعد انہوں نے دانتوں کو باہر نکالا تو نتیجہ کچھ یہ رہا۔ ریگولر کوک میں رکھا گیا دانت بالکل بدل گیا جس کی شکل آپ نیچے دیکھ سکتے ہیں، اسی طرح ڈائٹ مشروب میں رکھے گئے دانت کا یہ حال تو نہیں ہوا مگر اس پر بھی واضح داغ پڑ چکا تھا۔ تاہم سب سے برا حال انرجی ڈرنک میں ڈبوئے گئے دانت کا ہوا اور اس کے اوپر گلابی تہہ کے ساتھ سرخ رنگ جم گیا، جبکہ نچلا حصہ بھی بالکل بدل گیا۔ ڈاکٹر ٹام کا کہنا تھا کہ ان مشروبات میں شامل تیزابیت دانتوں کی سطح کو برباد کرنے کا باعث بنتی ہے جو کہ انسانی جسم کا مضبوط ترین حصہ ہوتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ان مشروبات کے نتیجے میں دانتوں کی سطح ختم ہوجاتی ہے جس سے درد اور حساسیت بڑھ جاتی ہے اور ان کے ٹوٹنے کا خطرہ بڑھا جاتا ہے۔

If you know that most of their soft drinks is very much the beauty of toothpaste, but to eliminate unsightly due to the Dalai Lama. It came in a medical research in America. From San Diego, was an experiment in this regard, Dr. Tom بائیر main dentest. Dur