اشاعت کے باوقار 30 سال

یورپ اور امریکہ میں شدید سردی سے 23 افراد ہلاک

یورپ اور امریکہ میں شدید سردی سے 23 افراد ہلاک

روم/ وارسا: یورپ اور امریکا بھر میں شدید سردی کی لہر کے باعث 23 افراد ہلاک جبکہ ہزاروں پروازیں منسوخ ہوگئیں۔ مرنے والوں میں زیادہ تر بے گھر اور تارکین وطن افراد شامل ہیں۔ صرف پولینڈ میں 2 روز کے دوران شدید ترین سردی کے باعث 10 افراد ہلاک ہوئے۔ پولینڈ کے حکومتی مرکز برائے سیکیورٹی کا کہنا ہے کہ نومبر سے اب تک سردی کے باعث 53 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ اٹلی میں سردی کے باعث 7 افراد کی ہلاکت کی اطلاع ہے، جن میں 5 بے گھر افراد شامل ہیں، جبکہ شدید برف باری کے باعث ملک بھر کے متعدد ایئرپورٹس بند رہے اورسیکڑوں فلائٹس منسوخ کردی گئیں۔ دوسری جانب چیک ری پبلک میں شدید سردی کے باعث 3 افراد ہلاک ہوئے۔ اس کے علاوہ بلغاریہ میں 2 عراقی تارکین وطن جبکہ یونان سے ایک افغان تارک وطن کی لاش ملی ہے۔ امریکا میں بھی برف باری کے باعث سردی کی شدت برقرار ہے۔ اس کے علاوہ ریاست میساچوسٹس کے شہر بوسٹن میں 12 انچ تک برف باری ریکارڈ کی گئی جبکہ محکمہ موسمیات نے مزید برف باری کی پیش گوئی بھی کی ہے۔

Because of a severe cold snap across Europe and America, thousands of flights were canceled, while 23 people were killed. Most of the victims are homeless and migrants. Only the most severe because of the cold during the day 2 in Poland, 10 people were ki