اشاعت کے باوقار 30 سال

آج کا دن تاریخ میں

معمر قذافی کو ہلاک کر دیا گیا

فرانس میں شہنشاہیت کا خاتمہ

انقلاب فرانس کے بعد قانون ساز اسمبلی نے آج کے روز 1792 ملک میں شہنشاہیت کا خاتمہ کر کے ملک میں جمہوری نظام قائم کرنے کی منظوری دے دی۔ اس سے قبل بادشاہ لوئی شانز دہم نے با دل ناخواستہ ایک قانون کے مسودے پر دستخط کر دئے تھے جس کی رو سے بادشاہ کو بہت سے اختیارات سے محروم کر دیا گیا تھا۔ لوئی شانز دہم 1774 میں تخت نشین ہوا تھا۔ اقتدار سنبھالتے ہی ورثے میں ملے ہوئے اقتصادی مسائل سے نبرد آزما ہونا اس کے بس میں نہ تھا۔ 1789 میں خوراک کی قلت کے بحران نے انقلاب فرانس کو جنم دیا۔ اگست 1792 میں بادشاہ لوئی شانزدہم اور ملکہ میری اینتو نیت کو گرفتار کر لیا گیا اور 21 ستمبر کو بادشاہت کا خاتمہ کر دیا گیا ۔ جلد ہی یہ انکشاف ہوا کہ بادشاہ لوئی انقلاب فرانس کو ناکام بنانے کے کئے دوسرے ممالک سے مدد حاصل کرنے کی کوشش کر رہا ہے۔چنانچہ اس پر بغاوت کا مقدمہ چلا جنوری 1793 میں بغاوت کے جرم کا مرتکب پا کر اسے موت کی سزا دی گئی۔ 21 جنوری کو گلوٹین کے ذریعہ اس کا سار قلم کر دیا گیا۔ 9 ماہ بعد ملکہ میری اینتونیت بھی گلوٹین کا شکار بن گئیں۔